April 21, 2024

Warning: sprintf(): Too few arguments in /www/wwwroot/bahaibluebonnet.com/wp-content/themes/chromenews/lib/breadcrumb-trail/inc/breadcrumbs.php on line 253
نیا قانون مسترد، ایف بی آر کا سی اے اے سے انکم ٹیکس وصول کرنے کا فیصلہ

فیڈرل بیورو آف ریونیو نے ٹیکسوں کا 9 ماہ کا ہدف (6700 ارب روپے) حاصل کرنے کے لیے سول ایوی ایشن اتھارٹی کے بینک اکاؤنٹس کو بھی نتھی کردیا ہے۔ ایف بی آر کو سی اے اے سے 13 ارب روپے وصول کرنے ہیں۔آخری ورکنگ دے تک کے اعداد و شمار کے مطابق ایف بی آر نے 6670 ارب روپے وصول کیے تھے جو 9 ماہ کے ہدف دے 41 ارب سے کم ہے۔ایف بی آر کے چیئرمین ملک امجد زبیر ٹوانہ نے بتایا ہے کہ 6707 ارب روپے کا ہدف پورا کرنے کے لیے بینک عام تعطیل کے دن بھی کھلے رہیں گے۔ ان کا کہنا ہے کہ مزید 34 ارب روپے ہفتے کو وصول کیے جائیں گے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ ایف بی آر نے سی اے اے کے بینک اکاؤنٹس نتھی کرکے 13 ارب روپے وصول کیے ہیں۔ سی اے اے کا دعویٰ ہے کہ گزشتہ سال اگست میں پارلیمنٹ نے دو قوانین کی منظوری دی تھی جن کے تحت انکم ٹیکس سے استنیٰ حاصل ہے۔انکم ٹیکس آرڈیننس کے ذریعے ٹیکس سے استثنٰیٰ نہیں دیا گیا ہے۔ یہ لا ڈویژن کی نا اہلی ہے کہ اس نے اُس نے ایک ایسا بل پارلیمنٹ میں پیش کیا جو انکم ٹیکس آرڈیننس سے مطابقت نہیں رکھتا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ آئی ایم ایف کے پروگرام اور خود پاکستان کے انکم ٹیکس قانون کی خلاف ورزی کرتے ہوئے دو سرکاری محکموں کو انکم ٹیکس سے استثنیٰ دیا گیا ہے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *